Under Construction

Jaffar e Tayyar..!

J.T.C.H.S

جعفر طیار – Jaffar e Tayyar

جعفرطیار : پراسرار آدمی کاخواتین کو ہراساں کرنے کی اطلاعات، اہل علاقہ محتاط رہیں

جعفرطیار : پراسرار آدمی کاخواتین کو ہراساں کرنے کی اطلاعات، اہل علاقہ محتاط رہیں

 جعفرطیار سوسائٹی میں ایک نامعلوم شخص کی جانب سے خواتین کو ہراساں کرنے کی اطلاعات موصول ہوئی ہیں۔

Content JTV

تفصیلات کے مطابق گذشتہ روز جعفرطیار سوسائٹی کے مختلف واٹس اپ گروپ پر ایک وائس نوٹ جاری ہوا جس میں ایک خاتون نے بتایا کہ مرکزی امام بارگاہ کے پیچھے والی گلی نوچندی علم اسٹریٹ کے قریب ایک شخص نے متاثرہ خاتوں کو کسی گھر میں بہانے سے داخل کرکے ہراساں کرنے کی کوشیش کی بعدازاں خاتون نے چالاکی کا مظاہرہ کرتے ہوئے راہ فرار اختیار کی اور چندنوجوانوں کو جمع کرلیا جسکے بعد وہ شخص فرار ہوگیا، اس موقع پر پہنچنے والے ایک اسکاوٹ کے جوان واقعہ کی تصدیق بھی کی ہے۔

دوسری جانب وائس نوٹ کی کنفرمیشن کے لئے جب ہمارے نمائندے نے تحقیقات کی تو جے ٹی وی کو سوشل میڈیا پرکچھ مزید میسج موصول ہوئے جس میں یہ انکشاف ہو ا کہ ایسے واقعات گذشتہ کئی سالوں سے ہورہے ہیں،ذرائع نے جے ٹی وی کو بتایا کہ عون و محمد اسٹریٹ 5، غازی چوک اور وکٹری گراونڈ کی طرف بھی ایسی ہی حرکت کچھ مزید نوجوان خواتین کے ساتھ کرنے کی کوشیش کی گئی ، شور شرابہ ہونے کی وجہ سے وہ شخص فرار ہوگیا۔

سوشل میڈیا پر پھیلی اس خبر کی وجہ سے اہل علاقہ میں تشویش پائی جارہی ہے ، جبکہ عدم تحفظ کا احساس بھی شد ت سے پایا جارہا ہے۔

یہ دھیان بھی رہے کہ سوسائٹی میں آئے دن اسٹریٹ کرائمز کی وارداتوں کی خبریں بھی رپورٹ ہورہی ہیں، ان اسٹریٹ کرمنلز کا نشانہ زیادہ تر صبح سویرے آفس یا کالج و یونیورسٹی جانے والے رہائشی بنتے ہیں۔

اسطرح کے واقعات جہاں سیکورٹی اداروں کی کارکردگی پر سوالیہ نشان ہیں وہیں جعفرطیار جیسی پرائیویٹ سوسائٹی میں موثرسیکورٹی نظام نا ہونا بھی باعث تشویش ہے۔

لہذا اسطرح کے حالات میں اہل علاقہ کی ذمہ داری بنتی ہے وہ از خود ارد گرد کے ماحول پر نظر رکھیں۔

دوسری جانب خواتین خصوصاً نوجوان مومنات سے گذارش ہے کہ کسی بھی نامحرم یا انجان کے کہنے یا بلانے کی کوشیش کرنے پر اردگرد موجود اہل علاقہ کو فوراً متوجہ کرنے کی کوشیش کریں تاکہ ایسے افراد کو پکڑا جاسکے۔

جبکہ سیکورٹی یا قانون نافذ کرنے والے اداروں کی بھی ذمہ داری ہے اسٹریٹ کرمنلز اور ایسی مشکوک حرکت کرنے والے عناصر کی سرکوبی کرنے کے لئے اپنی کوشیشوں کو تیز کرکے اہل علاقہ کے عدم تحفظ کی کیفیت اور بے چینی کو دور کریں ۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *


*